September 6, 1965 is the most important day in our military and defense history

یہ دن جنگ کے ان دنوں کی یاد دلاتا ہے جب پاکستان کی مسلح افواج اور پوری قوم نے بھارت کے ناپاک عزائم اور غیر اخلاقی جاریت کے خلاف اپنی آزادی اور قومی وقار کا بہادری اور بے مثال جرت کے ساتھ دفاع کیا ۔ اس مشکل وقت میں جو غیور اور بہادر پاکستانی عوام نے جو اپنی مسلح افواج کے ساتھ محبت اور یکجہتی کا مظاہرہ کیا وہ قابلِ ستائش تھا ۔۔
6 ستمبر 1965 ء کی صبح بھارت اچانک سرزمین پاکستان پر حملہ آور ہوا ۔ اس کا ارادہ تھا کہ وہ صبح کا ناشتہ لاہور کے جم خانہ میں کرے گا ۔۔ مگر حقیقت یہ ہے کہ جنگ افسانوی خیالات اور محض ہتھیاروں سے نہیں ، بلکہ غیرت ، جذبات ، اور قوت ِایمانی سے جیتی جاتی ہے
17 روزہ اس تاریخی جنگ میں اپنے سے دس گناہ بڑی طاقت کو ذلت آمیز پسپائی اور شکست پر مجبور کرکے پوری دنیا میں اس کا گھمنڈ اور تکبر خاک میں ملا دیا ہماری بہادر بری ، بحری اور فضائی افواج اور پوری قوم یکجان ہو کر دشمن کے سامنے سیسہ پلائی ہوئی دیواربن گئے
کوئی بھی قوم اپنے دفاع سے غافل نہیں رہ سکتی 1965 ء میں پاکستانی قوم نے دنیا کو دیکھا دیا کہ ہم ایک زندہ قوم ہیں ۔۔ ہر قوم کا ایک 6 ستمبر ہوتا ہے، جو اس کے زندہ ہونے کا ثبوت اور مثال دنیا میں قائم کرتا ہے ۔۔ ہم نے 1965 ء میں اپنی قوت و ہمت اور زندہ ہونے کا ثبوت دے دیا تھا ۔۔
ہماری افواج جس حوصلہ و ہمت سے دہشت گردی اور سازشوں سے نمٹ رہی ہیں وہ قابلَ ستائش و خراج تحسین ہیں مودی اور اسکے حواریوں کو یہ بتانا چاہتی ہوں کہ پاکستان کے ساتھ پنگا مت لو ستمبر 1965 ء میں بھی ہم نے ثابت کردیا تھا اس وقت تم دم دبا کر بھاگے تھے اب بھی تیار ہے